سندھ نا 12 کھرب، 40 ارب رپئی نا بجٹ مونا ہتنگا، سرکاری تنخواہ تیٹ ودکی

الّمی خوانبو

صوبہ سندھ نا مالی سال 21-2020 نا کم و ود 12 کھرب 40 ارب رپئی آن زیات بجٹ سندھ اسمبلی ٹی تننگانے۔

سندھ اسمبلی نا اجلاس اسپیکر آغا سراج درانی نا زیر صدارت مس ہراڑے سر وزیر سندھ مراد علی شاہ بجٹ ءِ مونا ایس۔

اندا نیام ئٹی اپوزیشن نا کنڈان ترند برانز کننگا، ہراٹی سر وزیر نا تقریر برجاء ئس۔

تینا ہشتمی بجٹ تران نا وختا سروزیر ملخ تا توننگ کن 44 کروڑ رپئی تخنگ نا پڑو ءِ کرے و کشت و کشار نا شعبہ نا نسخان آتے اُریسہ کشت و کشار نا بجٹ ٹی 15 ارب رپئی ودکی نا سلہ مونا ہتنگانے۔

او پارے کہ کورونا نا بابت جانجوڑی نا بجٹ 16 فیصد ودکی تون 139.8 ارب رپئی کننگ نا سلہ تننگانے، اندن کورونا ایمرجنسی فنڈ 3 ارب رپئی نا مرو۔

مالی سال 20-2019 محکمہ جانجوڑی کن بجٹ حساب 120.486 ارب روپئی ئس۔

بجٹ تران ٹی پاننگا کہ تعلیم نا بجٹ 10 فیصد ودکی تون 244.5 ارب رپئی کننگسہ ءِ اندن مالی سال 20-2019  ٹی تعلیم نا بجٹ 212.4 ارب رپئی ئس۔

صوبہ سندھ ٹی صوبائی دیمروی بجٹ 155 ارب اندن ضلعی دیمروی بجٹ 15 ارب رپئی نا مرو۔

بجٹ ٹی بلدیات کن گرانٹ ٹی 5 فیصد ودکی کریسہ دادے 78 ارب رپئی کننگا اندن تدوکا مالی سال ٹی بلدیات کن 74 ارب تخنگاسس۔ 

صوبائی بجٹ ٹی ڈامبر و دیر سرکننگ تون اوار دیر ئنا پین جتا منصوبہ غاک اوار کننگانو، ماس ٹرانزٹ و ٹرانسپورٹ کن 3 ارب 11 کروڑ رپئی تخنگانے۔

سندھ بجٹ ٹی ملیر ایکسپریس وے کن 2 ارب 7 کروڑ رپئی اندن کراچی ٹھٹہ شاہراہ کن اسہ ارب 86 کروڑ رپئی تخنگ نا پڑو کننگانے۔

بنجائی بجٹ ٹی کارندہ آتا تنخواتے زیات کتوس ولے صوبہ سندھ نا بجٹ ٹی سرکاری ملازمین تا تنخوا آتیٹ 10 فیصد اسکان ودکی نا پڑو کننگا۔

وزیراعلی سندھ مراد علی شاہ پارے کہ سندھ حکومت نا گریڈ اسٹ آن شانزدہ نا ملازم آتا تنخوا تیٹ 10 فیصد ودکی نا سلہ تننگانے اندن گریڈ 17 آن 21 نا افسر آتا تنخوا ٹی 5 فیصد ودکی کننگ ءُ۔  تنخوا تیٹ ودکی نا اطلاق صوبائی وزراء و کابینہ نا باسک آ مروف۔

یاتی مرے کہ وفاق و پنجاب ہم مالی سال 21-2020  نا بجٹ مونا ہتنگانے، ہراڑا بحث برجاہ ءِ۔

 

پُوسکنا حوالک

بلوچ راجی مچی نا بشخ مرِسہ جہان ءِ نشان ایتبو کہ نن زندہ و شرفدار ءُ راج ئسے اُن۔ ماہ رنگ بلوچ

بلوچ راج 28 جولائی نا دے گوادر ئٹ سرمریر و جہان ئے کلہو ایتر کہ نن زندہ و خوددار...