گوادر و تربت:  اِرا بندغ زوراکی ئٹ بیگواہ

الّمی خوانبو

حوال تا رد ئٹ بلوچستان نا دریابی شار گوادر و ضلع کیچ ئنا بنجائی شار تربت آن اِرا بندغ زوراکی ئٹ بیگواہ کننگانو۔

شابیتی حوال تا رد ئٹ بلوچستان نا دریابی شار گوادر آن پاکستانی فورسز آک اسہ بندغ ئسے زوراکی ئٹ بیگواہی نا گواچی کرسہ نا درست ءُ ہند ئسے آ دریر۔

حوال آتا رد ئٹ دریابی شار گوادر نا علاقہ کلانچی پاڈہ غان پاکستانی فورسز آک ساجد ولد خالد پنی ءُ بندغ ئسے دزگیر کرسہ بیگواہ کریر۔

حوالکار نا رد ئٹ پن کروک بندغ بنداوہی دشت مونڈی نا ہندی سے، ہرا دا وخت آ تینا باوہ پیرئی علاقہ غان ہمپ و لڈ کرسہ گوادر ئٹ ہندی ئس۔

ایلو کنڈ آن بلوچی بولی نا نوشتکار سکی ساوڑ تربت آن بیگواہ کننگانے۔ سخی بخش پن کروک سکی ساوڑ بلوچی بولی نا شاعر و نوشتکار ئسے۔

سخی بخش بلوچ نا تعلقداری بلوچستان نا ضلع خضدار نا علاقہ نال گریشہ غان ءِ۔ حوال تا رد ئٹ درو اُرا غان پیشتمنگ آن گڈ بیگواہ مسس، ہرانا دائسکان ہچو حوال ئس اف۔

یاتی مرے کہ اود بلوچی بولی ٹی بندغ آتے خوانفیکہ، بھلو کچ ئسے ٹی ہندنو خوانندہ ءُ ہرافک بلوچی “سیاھگ راست نبیسگ” سکی ساوڑ آن ہیل کرینو۔

سخی بخش نا خاہوت پک کرسہ پارے کہ نن سکی ساوڑ نا بیگواہ مننگ نا حوال ءِ پولیس ءِ تسنن۔ اوفک کوالخواہ تان خواست کریر کہ سکی ساوڑ نا یلہ مننگ ئٹ تینا کڑد ءِ سر تیر۔

پُوسکنا حوالک

بلوچ راجی مچی نا بشخ مرِسہ جہان ءِ نشان ایتبو کہ نن زندہ و شرفدار ءُ راج ئسے اُن۔ ماہ رنگ بلوچ

بلوچ راج 28 جولائی نا دے گوادر ئٹ سرمریر و جہان ئے کلہو ایتر کہ نن زندہ و خوددار...